Bharat Express

Jasprit Bumrah

نہ صرف روہت شرما بلکہ جسپریت بمراہ اور سوریہ کمار یادو بھی آئی پی ایل 2024 کے بعد ممبئی انڈینس چھوڑ سکتے ہیں۔ روہت شرما کو ایم آئی کے ساتھ 14 سال کا تجربہ ہے، سوریہ کمار یادو کو 9 سال کا تجربہ ہے اور جسپریت بمراہ کو اس ٹیم کے ساتھ 12 سال کا تجربہ ہے۔

آئی پی ایل کا پہلا سیزن 2008 میں کھیلا گیا تھا۔ شاہد آفریدی، شعیب اختر، کامران اکمل اور سلمان بٹ سمیت کئی پاکستانی کرکٹرز پہلے سیزن میں کھیلے لیکن ممبئی حملوں کے بعد پاکستانی کرکٹرز پر آئی پی ایل میں پابندی عائد کردی گئی۔ اس کے بعد سے پاکستانی کرکٹرز نے آئی پی ایل میں حصہ نہیں لیا۔

ہندوستانی گیند باز جسپریت بمراہ نے آئی پی ایل میں کمال کی کارکردگی پیش کی ہے، لیکن ایک رپورٹ کے مطابق، ممبئی انڈینس 2015 میں بمراہ کو ٹیم سے نکالنا چاہتی تھی۔

ہندوستان نے وراٹ کوہلی، شریئس ایر اور کے ایل راہل جیسے عظیم کھلاڑیوں کی غیر موجودگی میں نوجوان کھلاڑیوں کو موقع دیا۔ اہم بات یہ تھی کہ نوجوان کھلاڑی توقعات پر پورا اترے۔ یشسوی جیسوال، دھرو جریل اور سرفراز خان نے عمدہ کارکردگی کا مظاہرہ کیا۔

جہاں جسپریت  بمراہ کو چوتھے ٹیسٹ کے لیے آرام دیا گیا ہے۔ سینئر بلے باز کے ایل راہول بھی مکمل فٹ نہ ہونے کی وجہ سے چوتھے ٹیسٹ سے باہر ہو گئے ہیں۔

اس کے علاوہ جسپریت بمراہ کے حوالے سے رپورٹ میں ایک بڑا اپ ڈیٹ دیا گیا ہے۔ قابل ذکر با ت یہ ہے کہ بمراہ کو چوتھے ٹیسٹ کے لیے آرام دیا جا سکتا ہے۔

بی سی سی آئی نے انگلینڈ کے خلاف آخری تین ٹیسٹ کے لیے ٹیم انڈیا کا اعلان کر دیا ہے۔ ٹیم میں ایک نئے چہرے کو بھی موقع ملا ہے۔ وہیں کے ایل راہل اور رویندر جڈیجہ کی ٹیم میں واپسی ہوئی ہے۔ اس کے علاوہ وراٹ کوہلی آخری تین ٹیسٹ میں بھی ٹیم انڈیا کا حصہ نہیں ہیں۔

Jasprit Test Bumrah Ranking: جسپریت بمراہ ٹسٹ گیند بازی رینکنگ میں ٹاپ پر پہنچ گئے ہیں۔ وہیں وراٹ کوہلی اور روی چندرن اشون کو رینکنگ میں نقصان ہوا ہے۔

جسپریت بمراہ ٹسٹ کرکٹ میں بھی نمبر ایک گیند باز بن گئے ہیں۔ تینوں فارمیٹ میں نمبر ون بننے والے جسپریت بمراہ دنیا کے پہلے گیند باز ہیں۔

جسپریت بمراہ کی واپسی کو ٹیسٹ کرکٹ کی تاریخ میں سب سے کامیاب واپسی کے طور پر بھی دیکھا جا سکتا ہے۔ 2022 میں جسپریت بمراہ کمر کی چوٹ کی وجہ سے تقریباً ایک سال تک کرکٹ کے میدان سے دور رہے۔