Shehla Rashid Again Praise PM Narendra Modi: پی ایم مودی نے ایک بار پھر ناممکن کو ممکن بنایا، شہلا راشد نے خوشی نے کیا اظہار   

ہندوستانی بحریہ کے آٹھ سابق فوجی جنہیں قطر میں موت کی سزا سنائی گئی تھی۔ دوحہ کی ایک عدالت نے 12 فروری کو رہا کر دیا ہے۔ ان میں سے سات ہندوستان واپس بھی آچکے ہیں۔

پی ایم مودی نے ایک بار پھر ناممکن کو ممکن بنایا، شہلا رشید نے خوشی نے کیا اظہار   

Shehla Rashid Again Praise PM Narendra Modi: دہلی کی جواہر لال نہرو یونیورسٹی (جے این یو) کی سابق طالب علم شہلا راشد نے قطر میں قید سابق بھارت میرینز(بحریہ) کی رہائی اور واپسی کے معاملے پر وزیر اعظم نریندر مودی کی تعریف کی ہے۔ انہوں نے سوشل میڈیا پلیٹ فارم پر لکھا وزیر اعظم مودی اور وزیر خارجہ ڈاکٹر جے شنکر نے ایک بار پھر ناممکن کو ممکن کر دکھایا۔ پرسکون رہیں اور یقین بنائںی رکھیں۔ “قطر سے واپس آنے والے سابق میرینز کے اہل خانہ کو مبارکباد۔”

دوحہ کی ایک عدالت نے 12 فروری کو رہا کر دیا ہے

قابل ذکر بات یہ ہے کہ  ہندوستانی بحریہ کے آٹھ سابق فوجی جنہیں قطر میں موت کی سزا سنائی گئی تھی۔ دوحہ کی ایک عدالت نے 12 فروری کو رہا کر دیا ہے۔ ان میں سے سات ہندوستان واپس بھی آچکے ہیں۔ دوحہ میں مقیم الدہرہ گلوبل ٹیکنالوجیز کے ساتھ کام کرنے والے آٹھ سابق ہندوستانی بحریہ کے اہلکاروں کو گزشتہ سال 28 دسمبر کو قطر کی اپیل کورٹ نے راحت دی تھی۔ پھر اکتوبر 2023 میں عدالت نے اسے دی گئی موت کی سزا کو کم کر دیا اور اسے تین سال سے لے کر 25 سال تک کی مختلف مدتوں کے لیے جیل بھیج دیا۔ اس پوری جیت کا کریڈٹ پی ایم نریندر مودی، قومی سلامتی کے مشیر اجیت ڈوول اور وزیر خارجہ جے شنکر کو دیا جا رہا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: کیا بہار میں ہو جائے گا کھیل؟ جے ڈی یو-بی جے پی کے 3 ممبران اسمبلی فلور ٹیسٹ سے پہلے ابھی تک نہیں پہنچے اسمبلی

کون ہیں  شہلا راشد ؟

شہلا راشد جواہر لال نہرو یونیورسٹی (JNU) کی طالبہ رہ چکی ہیں۔ شہلا راشد پہلی بار اس وقت سرخیوں میں آئیں جب 2016 میں جے این یو میں کچھ طلبہ نے مبینہ طور پر ‘بھارت تیرے تکدے ہوں گے’ کے نعرے لگائے۔ اس سلسلے میں جے این یو ایس یو کے صدر کنہیا کمار اور عمر خالد کو بھی گرفتار کیا گیا تھا۔ اس گرفتاری کے بعد شہلا راشد نے مرکزی حکومت اور دہلی پولیس کے خلاف محاذ کھول دیا تھا۔شہلا راشد وقتاً فوقتاً نریندر مودی حکومت کو تنقید کا نشانہ بناتی رہی ہیں، لیکن گزشتہ چند سالوں میں ان میں کافی تبدیلی آئی ہے۔ وہ پہلے ہی کئی مواقع پر وزیراعظم نریندر مودی اور وزیر داخلہ امت شاہ کی تعریف کر چکی ہیں۔ وہ کشمیر میں ہونے والی تبدیلیوں کو کئی بار مثبت بھی بتا چکے ہیں۔

بھارت ایکشپریس