U19 World Cup: آسٹریلیا 14 سال بعد انڈر 19 ورلڈ کپ کا بنا  چیمپئن

کنگارو نے بھارتی ٹیم کا ایک سال کے اندر تیسری بار ورلڈ کپ جیتنے کا خواب چکنا چور کردیا۔ گزشتہ سال جون میں آسٹریلیا نے ورلڈ ٹیسٹ چیمپئن شپ کے فائنل میں بھارت کو شکست دی تھی۔

آسٹریلیا 14 سال بعد انڈر 19 ورلڈ کپ کا بنا  چیمپئن

U19 World Cup: آسٹریلیا نے ایک بار پھر بھارت کا آئی سی سی ٹائٹل جیتنے کا خواب توڑ دیا۔ گزشتہ 8 ماہ میں تیسری بار کنگارو نے فائنل میں ٹیم انڈیا کو شکست دی ہے۔ اتوار کو انڈر 19 ورلڈ کپ 2024 کے فائنل میں آسٹریلیا نے بھارت کو 79 رنز سے شکست دی۔ اس طرح  کنگارو نے 14 سال بعد انڈر 19 ورلڈ کپ کا ٹائٹل جیت لیا۔ پہلے انڈر 19 ورلڈ کپ کے فائنل میں آسٹریلیا نے بھارت کو شکست دے دی ہے۔

آسٹریلیا نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے مقررہ 50 اوورز میں سات وکٹوں پر 253 رنز کا مشکل اسکور بنایا۔ قابل ذکر بات یہ  یہ انڈر 19 ورلڈ کپ کی تاریخ میں فائنل میں سب سے زیادہ سکور تھا۔ جواب میں ہندوستانی ٹیم 43.5 اوورز میں 174 رنز بناکر آل آؤٹ ہوگئی۔

آسٹریلیا نے بھارت کا خواب توڑ دیا


کنگارو نے بھارتی ٹیم کا ایک سال کے اندر تیسری بار ورلڈ کپ جیتنے کا خواب چکنا چور کردیا۔ گزشتہ سال جون میں آسٹریلیا نے ورلڈ ٹیسٹ چیمپئن شپ کے فائنل میں بھارت کو شکست دی تھی۔ پھر پچھلے سال ہی 19 نومبر کو کینگروز نے ون ڈے ورلڈ کپ کے فائنل میں ہندوستانی ٹیم کو شکست دی تھی۔ اب 85 ​​دن کے بعد آسٹریلیا نے ٹیم انڈیا کو تیسری بار ٹائٹل میچ میں شکست دی ہے۔

انڈر 19 ورلڈ کپ 2024 کے فائنل میچ میں آسٹریلیا نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کی۔ آسٹریلیا کی جانب سے ہرجاس سنگھ (64 گیندوں پر 55 رنز، تین چوکے، تین چھکے)، ہیری ڈکسن (56 گیندوں پر 42 رنز)، کپتان ہیو وائبگن (66 گیندوں پر 48 رنز) اور اولیور پیک (43 گیندوں پر ناٹ آؤٹ 46 رنز)۔ اہم اننگز کھیلی۔ بھارت کی جانب سے فاسٹ بولر راج لمبانی نے 38 رنز کے عوض تین وکٹیں حاصل کیں جب کہ لیفٹ آرم فاسٹ بولر نمن تیواری نے 63 رنز کے عوض دو وکٹیں حاصل کیں۔

اس میچ میں آسٹریلوی ٹیم چار تیز گیند بازوں کے ساتھ اتری۔ تیز گیند بازوں کو بھی پچ سے مدد مل رہی تھی۔ گیند زیادہ سوئنگ نہیں ہو رہی تھی لیکن کافی اچھال تھا۔ ایسے میں آسٹریلیا کا چار تیز گیند بازوں کے ساتھ جانے کا فیصلہ درست ثابت ہوا۔ ہندوستانی بلے باز کنڈیشنز سے ہم آہنگ نہ ہو سکے۔ بھارت کی جانب سے صرف چار بلے باز دوہرے ہندسے تک پہنچے۔ جن میں اوپنر آدرش سنگھ (47) اور نچلے آرڈر کے بلے باز مروگن ابھیشیک (42) شامل ہیں۔

آسٹریلیا کی جانب سے فاسٹ باؤلر مہالی بیئرڈمین نے 15 رنز کے عوض تین وکٹیں حاصل کیں جبکہ کالم وڈلر نے 35 رنز کے عوض دو وکٹیں حاصل کیں۔ دوسری جانب آف اسپنر راف میک ملن نے 43 رنز کے عوض تین وکٹیں لے کر فتح میں عمدہ کردار ادا کیا۔

بھارت ایکسپریس